Android AppiOS App

پاکستانی ادارے کا وہ ڈرائیور جسکی ماہانہ تنخواہ ساڑھے تین لاکھ روپے ہے۔۔!!یہ موصوف کون ہیں؟ تہلکہ خیز دعویٰ

  بدھ‬‮ 10 فروری‬‮ 2021  |  18:04

اسلام آباد میں سرکاری ملازمین تنخواہوں میں اضافے کیلئے سراپہ احتجاج ہیں اور سکریٹریٹ کا علاقہ میدان جنگ بنا ہواہے جبکہ حکومت چالیس فیصد اضافے پر رضامند ہے اور مذاکرات کیلئے متعدد بار کوششیں بھی کر چکی ہے ۔ تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت ہونے والی وفاقی کابینہ کے

اجلاس میں یہ معاملہ بھی زیر غور آیا جس دوران بریفنگ بھی دی گئی ۔ کابینہ میٹنگ میں دی جانے والی بریفنگ سے متعلق تحقیقاتی صحافی زاہد گشکوری نے بڑا دعویٰ کر دیاہے ۔صحافی کا کہناتھا کہ میٹنگ کے دوران بتایا گیا کہ ” سرکاری ملازمین تنخواہوں میں بڑے فرق کے خلاف سراپا احتجاج ہیں یعنی اس وقت ” نیشنل انشورنس کمپنی لیمیٹڈ “ (NICL)کے چیئرمین کے ڈرائیور کی تنخواہ ساڑھے تین لاکھ روپے

ہے اور سپریم کورٹ کے ڈرائیور کی تنخواہ 76 ہزار روپے ہے جبکہ 17 ویں سکیل کے سی ایس ایس آفیسر کی تنخواہ محض 45 ہزار روپے ہے ۔ اسی معاملے کو بنیاد بناتے ہوئے سرکاری ملازمین مسلسل احتجاج کر رہے ہیں ۔

انٹرنیٹ کی دنیا سے ‎‎

دن کی زیادہ پڑھی گئیں پوسٹس‎