Android AppiOS App

قومی ڈائیلاگ خارج از امکان ،حکومت کے خاتمے کاوقت آگیا،کھلاڑیوں کوپریشان کردینے والی خبرآگئی

  بدھ‬‮ 6 جنوری‬‮ 2021  |  14:36

پاکستان ڈیموکریٹ موومٹ(پی ڈی ایم )کے صدر مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ نیشنل ڈائیلاگ کس سے کریں، جعلی حکمرانوں سے بات نہیں کریں گے، پی ڈی ایم میں کوئی اختلافات نہیں، استعفوں اور لانگ مارچ کی حکمت عملی طے کرنے لئے ہمارے پاس کافی وقت ہے، حکمت عملی کے تحت آگے بڑھ رہے ہیں۔

بدھ کو ڈی جی خان میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ جعلی حکومت کے ساتھ قومی ڈائیلاگ خارج از امکان ہے یہ قومی ڈائیلاگ کا نہیںبلکہ جعلی حکومت کے جانے کا وقت ہے، اس کو وقت پورا نہیں کرنے دینا چاہیے، آئین و قانون کے دائرے میں حکمت عملی پر متوجہ ہیں، سینیٹ الیکشن کے بارے میں فیصلے متفقہ ہیں، قوم کو ووٹ کی امانت واپس ملنی چاہیئے، جنوری

کا پورا ماہ ہے، آئندہ کا لائحہ عمل طے کریں گے۔فضل الرحمان نے کہا کہ آج بنوں میں سب سے بڑا اجتماع ہوگا، حکومت ہمارے مظاہروں کو نہیں روک سکتی، ملتان اور لاہور میں کوشش کی، لاکھوں کے اجتماع کو 4، 3 ہزار کا اجتماع ظاہر کرنے کی کوشش کی۔ایک سوال کے جواب میں مولانافضل الرحمن نے کہا کہ حکومت کہتی ہے کہ ملک میں

دہشت گردوں کو شکست دیدی ہے مگر بلوچستان میں اب بھی دہشت گرد دندناتے پھر رہے ہیں معصوم لوگوں کا قتل عام کیا جارہاہے کہاں ہے وہ شکست جو حکومت نے دی ؟انہوں نے کہاکہ سانحہ مچھ اندوہناک واقعہ ہے، ذمے داروں کو کیفر کردار تک پہنچایا جائے۔

انٹرنیٹ کی دنیا سے ‎‎

دن کی زیادہ پڑھی گئیں پوسٹس‎