Android AppiOS App

پارٹی سے نکالنے جانے کے بعد حافظ حسین احمد کا پہلا بیان سامنے آگیا ،بڑا اعلان کر دیا

  ہفتہ‬‮ 26 دسمبر‬‮ 2020  |  13:16

جے یو آئی (ف)کے سینئر ترین رہنما حافظ حسین احمد کو پارٹی سے نکالنے کے بعد پہلا بیان سامنے آگیا ۔ حافظ حسین احمد نے کہا ہے کہ آج پارٹی سے 4سینئر رہنمائوں کی رکنیت ڈکٹیٹر شپ سے ختم کی گئی ہے ۔ پارٹی فیصلے پر تنقید کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ جمہوریت کے دعویدار وں سےپارٹی میں جمہوریت کے

کا نظام برداشت نہیں ہوتا آج جہاں لیڈر کیخلاف بات کہ وہاں رکنیت ختم کر دی جاتی ہے ۔ دوسری جانب جمعیت علماء اسلام کی پارٹی ڈسپلن کی خلاف ورزی کرنے والے ارکان معاملہ ،کمیٹی نے مولانا محمد خان شیرانی، حافظ حسین احمد، مولانا گل نصیب خان، مولانا شجاع الملک کی بنیادی رکنیت ختم کردی ۔ جمعیت علماء اسلام کی پارٹی ڈسپلنری کمیٹی کا پارٹی

پالیسی سے انحراف کرنے والے اراکین سے متعلق بڑا فیصلہ کرلیا گیا ، ذرائع کے مطابق کمیٹی نے مولانا محمد خان شیرانی، حافظ حسین احمد، مولانا گل نصیب خان، مولانا شجاع الملک کی بنیادی رکنیت ختم کردی ، کمیٹی نے چاروں رہنمائوں کو پارٹی ڈسپلن کی خلاف ورزی کرنے پر رکنیت ختم کرکے پارٹی سے نکال دیا،چاروں رہنمائوں کو نکالنے کا فیصلہ پارٹی ڈسپلنری کمیٹی نے کیا ، ڈسپلنری کمیٹی کے سربراہ سائیں عبدالقیوم ہالیجوی کی ہدایت پر پارٹی جلد بنیادی رکنیت ختم کرنے کا نوٹیفکیشن جاری کریں گی، کمیٹی ممبران آغا ایوب شاہ، مولانا عبدالواسع، مولانا عبدالحکیم اکبری سمیت دیگر نے متفقہ طور پر فیصلہ کیا۔ ذرائع کے مطابق کمیٹی نے فیصلہ کیاکہ چاروں رہنمائوں کے ساتھ پارٹی رہنما پارٹی نظم سے متعلق پروگراموں میں شرکت کریں گا انکی بھی رکنیت ختم کردی جائے گی۔

انٹرنیٹ کی دنیا سے ‎‎

دن کی زیادہ پڑھی گئیں پوسٹس‎