Android AppiOS App

کورونا میں مسلسل اضافہ پاکستان کے اہم ترین شہر میں بازار بند کرنے کا فیصلہ ہو گیا

  بدھ‬‮ 14 اکتوبر‬‮ 2020  |  16:22

ملک میں کرونا وبا کی دوسری لہر شروع ہو گئی ہے جس کے باعث کرونا کے کیسز میں اضافہ ہوا ہے۔ان حالات کو دیکھتے ہوئے کراچی کے ضلع وسطی میں کورونا وائرس کیسز پھیلنے کے پیش نظر تمام بچت اور گاڑیوں کے بازار بند کرنے کا حکم دے دیا گیا۔ کورونا وائرس کے پیش نظر ڈپٹی کمشنر نے ہر قسم کے بازار کے

اجازت نامے منسوخ کرتے ہوئے بچت بازاروں سمیت گاڑیوں کے بازار بھی بند کرنے کا حکم دے دیا۔کراچی سمیت صوبہ بھر میں کرونا وائرس سے گزشتہ 24 گھنٹوں میں مزید 6 افراد جاں بحق ہوگئےجبکہ 222 نئےکیسز رپورٹ ہوئےہیں۔ ملک میں اگرچی پنجاب میں کرونا وبا کے کیسز زیادہ ہیں مگر کراچی بھی اب اسی لائن میں آتا نظر آرہا ہے۔لوگوں کو ہدایات دینے

کے باوجود ایس او پیز کی خلاف ورزی جاری ہے جس کے باعث کرونا کے کیسز میں اضافہ ہو رہا ہے۔شہرقائد کے سب سے زیادہ آبادی والے ضلع وسطی میں کورونا وائرس پھیلنے کے خدشے کے باعث تمام بچت بازار اور گاڑیوں کے بازار بند کرنے کا فیصلہ کیاگیا۔دوسری جانب ایک اور خبر کے مطابق رائیونڈ کے عالمی تبلیغی اجتماع کاشیڈول اورکورونا کی وجہ سے ایس اوپیز جاری کردیئے گئے ہیں۔

تبلیغی اجتماع کا پہلا مرحلہ 6 نومبر سے شروع ہوگا جو 8 نومبرتک جاری رہے گا۔رواں سال بیرون ملک سے آنے والے مہمان اجتماع میں شریک نہیں ہوسکیں گے، اجتماع گاہ میں ایک بار داخل ہونے کے بعد اختتام تک باہرجانے کی اجازت نہیں ہوگی،شرکا کے لئے قومی شناختی کارڈ اورماسک لازمی ہوگا، انفرادی طور پرکسی کو اجتماع میں شرکت کی اجازت نہیں ہوگی۔بیمار لوگ اور پاکستان میں زیرتعلیم غیرملکی طلبا اجتماع میں شرکت نہیں کرسکیں گے، تمام افراد گروپ کی شکل میں آئیں گیاور ہرگروپ کا ایک امیرہوگا۔اجتماع گاہ کے اندر ضروریات زندگی کا اہتمام ہوگا۔اجتماع گاہ کے اندر سونے کی ترتیب بھی پہلےکی نسبت تبدیل کی گئی ہے ، دو بستروں کے درمیان ایک بسترکی جگہ خالی چھوڑی جائے گی۔

انٹرنیٹ کی دنیا سے ‎‎

دن کی زیادہ پڑھی گئیں پوسٹس‎