Android AppiOS App

سیالکوٹ کی ایک لڑکی نے معاشرے کا پول کھول دیا

  منگل‬‮ 6 اکتوبر‬‮ 2020  |  19:52

اپنی جینڈر تبدیل کروانے والی پاکستانی گلوکارہ و ماڈل شاعرہ رائے کو عام طور پر لوگ ٹرانس جینڈر گلوکارہ ہی سمجھتے ہیں۔ تاہم درحقیقت انہوں نے جینڈر ڈس آرڈر اور ہارمونز کی خرابی کے باعث جوانی سے قبل ہی اپنی جنس تبدیل کروائی تھی۔حال ہی میں شاعرہ رائے نے ایک انٹرویو میں

پہلی بار اپنی جینڈر اور زندگی پر کھل کر بات کی اور بتایا کہ کس طرح انہیں جینڈر تبدیل کروانے سے قبل مسائل کا سامنا کرنا پڑتا تھا۔شاعرہ رائے کا کہنا تھا کہ وہ پیدائش سے لے کر تقریبا بلوغت تک لڑکا ہی تھیں تاہم ان میں کبھی بھی لڑکوں والے احساسات نہیں جاگے اور ان کی شکل بھی لڑکیوں کی طرح تھی۔گلوکارہ کے مطابق وہ بچپن سے ہی اپنے مخصوص مسائل سے متعلق آگاہ

تھیں اور ان کی والدہ کو بھی ان کی پریشانیوں کا علم تھا مگر ان کی باتوں پر کوئی یقین نہیں کرتا تھا اور ہر کوئی سمجھتا تھا کہ وہ بہانے اور ڈرامے کر رہی ہیں۔ انہوں نے

بتایا کہ جینڈر تبدیل کروانے سے قبل بھی انہیں بہت سارے لوگ پریشان کرتے تھے اور تبدیلی جینڈر کے بعد انہیں مزید تنگ کیا گیا، جس کے باعث انہوں نے کم سے کم لوگوں سے تعلقات رکھے۔خیال رہے کہ شاعرہ رائے پنجاب کے شہر سیالکوٹ میں پیدا ہوئیں اور بچپن میں ہی والدین کے ہمراہ لاہور منتقل ہوگئیں، جہاں انہوں نے کالج تک تعلیم حاصل کی۔دوران تعلیم بھی انہیں تنگ کیا جاتا رہا اور انہوں نے کالج کی تعلیم کے دوران ہی اپنی جینڈر تبدیل کروائی، جس کے بعد وہ اعلیٰ تعلیم کے لیے دبئی چلی گئیں۔

انٹرنیٹ کی دنیا سے ‎‎

دن کی زیادہ پڑھی گئیں پوسٹس‎