Android AppiOS App

بین البراعظمی بیلسٹک میزائلوں کو روکنے اور تباہ کرنے کے لیے روس کیا کرنے جارہا ہے ؟ تجربات شروع کرنے کا اعلان کر دیا

  جمعہ‬‮ 17 جنوری‬‮ 2020  |  15:01

روسی وزارت دفاع نے حال ہی میں اعلان کیا ہے کہ 2020ء میں جدید ترین میزائل دفاعی نظام ایس 500 پرومیٹیوس کا تجرباتی عمل شروع ہوجائے گا۔میڈیارپورٹس کے مطابق فوجی امور پرمعلومات شائع کرنے والی ویب سائٹ آرمی ریکگنیشن نے بتایاکہ ایس500کا پہلا سسٹم 2025ء تک مکمل کرنے اور اسے مارکیٹ میں لانے کی توقع کی جا رہی ہے۔ایس 500 میزائل سسٹم موجودہ ایس 400ٹرامف میزائل دفاعی نظام کا اپ گریڈ ورڑن ہے۔ جدید ترین نظام آئی سی بی ایم بین البراعظمی بیلسٹک میزائلوں کو روکنے اور تباہ کرنے کے لیے ڈیزائن کیا گیا ہے۔ یہ سسٹم طرح تیز

رفتار کروز میزائلوں اور جیمنگ سسٹم اور اسٹیلتھ ہوائی جہازوں سے لیس ہوگا۔روسی فوجی ذرائع کے مطابق ایس500فضائی دفاعی نظام میں اینٹی بیلسٹک میزائل انٹرسیپٹرز کی زیادہ سے

زیادہ حد 600 کلومیٹر ہوگی جبکہ اینٹی میزائل انٹرسیپٹر میزائل کی زیادہ سے زیادہ تعداد 500 کلومیٹر ہوگی۔ایس 500 میں بیک وقت 10 ہائپرسونک اہداف (یعنی 5 کلومیٹر فی سیکنڈ کی رفتار سے 7 کلومیٹر فی سیکنڈ کی پرواز) ہدف کونشانہ بنانے کی صلاحیت ہوگی۔ یہ نظام 3500 کلومیٹر کی رینج کے ساتھ بیلسٹک میزائلوں کا سراغ لگانے اور انہیں تباہ کرنے کے لیے استعمال ہوگا۔ایس500 دفاعی نظام موبائل اینٹی گریٹڈ خصوصیات کا حامل ہوگا ،

جس میں ایک فوجی ایس یو وی ٹرک کے پچھلے حصے پر میزائل لانچر نصب ہوں گے۔ ایس 500 کی بیٹری میں مذکورہ ٹرکوں کی پشت پر سوار 77P6 لانچ گاڑیاں شامل ہوں گی ، جبکہ 85Zh6-2 کمانڈ اینڈ کنٹرول پوائنٹس ،چھ پہیے ڈرائیو ٹرک کی پشت پر ہوں گی۔یہ سسٹم 91 این6 اے (ایم) کے حصول اور جنگ کے انتظام کے راڈار سے لیس ہوگا جو بگ برڈ 91N6 کی ایک نئی اور اپ گریڈ شکل ہوگی، جس کو آٹھ پہیے والے ٹریکٹر کے ذریعہ منتقل کیا جائے گا۔ایس 500میزائل سسٹم میں ایک پنیر بورڈ 96L6 ریڈار شامل ہوگا جو ٹرک کے عقب میں نصب کیا جائے گا۔ آٹھ پہیے والی ٹرک چیسیس پر 76T6 ملٹی فارمیٹ ریڈار بھی لگایا جائے گا۔ اس سسٹم میں 77T6 اینٹی بیلسٹک ریڈار بھی شامل ہے جو BAZ-69096 ڈیک ٹرک پر نصب ہے۔

انٹرنیٹ کی دنیا سے ‎‎

دن کی زیادہ پڑھی گئیں پوسٹس‎