قوم عاد کا رب کو چیلنج

  منگل‬‮ 29 مئی‬‮‬‮ 2018  |  15:40

قوم “عاد “قوم عاد ایک ایسی قوم تھی جوبڑے طاقتور تھے چالیس ہاتھ جتنا قدآٹھ سو سے نو سو سے سال کی عمر نہ بوڑھے ھوتےنہ بیمار ھوتے نہ دانت ٹوٹتےنہ نظر کمزور ھوتیجوان تندرست و توانا رہتےبس انھیں صرف موت آتی تھیاور کچھ نہیں ھوتا تھاصرف موت آتی تھی ان کی طرف اللہ تعالی نے حضرت ھود علیہ السلام کو بھیجاانھوں نے ایک اللہ کی دعوت دی۔

اللہ کی پکڑ سے ڈرایا مگر وہ بولےاے ھود ! ہمارے خداوں نے تیری عقل خراب کر دی ھےجا جا اپنے نفل پڑھہمیں نہ ڈراہمیں نہ ٹوک تیرے کہنے

پر کیا ہم اپنے باپ دادا کا چال چلن چھوڑ دیں گےعقل خراب ھوگئی تیریجا جا اپنا کام کرآیا بڑا نیک چلن کا حاجی نمازیتیرے کہنے پر چلیں تو ہم تو بھوکے مر جائیںانھوں نے شرک ظلم اور گناھوں کے طوفان سے اللہ کو للکاراتکبر اور غرور میں بد مست بولےفَأَمَّا عَادٌ فَاسْتَكْبَرُ وا فِي الْأَرْضِ بِغَيْرِالْحَقِّ وَقَالُوا مَنْ أَشَدُّ مِنَّا قُوَّةً ۖ أَوَلَمْ يَرَوْا أَنَّ اللَّـهَ الَّذِي خَلَقَهُمْ هُوَ أَشَدُّ مِنْهُمْ قُوَّةً ۖ وَكَانُوا بِآيَاتِنَا يَجْحَدُونَ ١٥ اب قوم عاد نے تو بےوجہ زمین میں سرکشی شروع کردی اور کہنے لگے ہم سے زور آور کون ہے؟ (۱) کیا انہیں یہ نظر نہ آیا کہ جس نے اسے پیدا کیا وہ ان سے (بہت ہی) زیادہ زور آور ہے، (۲) وہ (آخر تک) ہماری آیتوں کا (۳) انکار ہی کرتے رہے۔کوئی ھے ہم سے ذیادہ طاقتور تو لاو ناں ؟ہمیں کس سے ڈراتے ھو ؟اللہ نے قحط بھیجابھوک لگیسارا غلہ کھاگئےمال مویشی کھا گئےحرام پر اگئےچوھے بلی کتے کھاگئےسانپ کھاگئےدرخت گرا کر اسکے پتے کھا گئے۔۔

بھوک نہ مٹینہ بارش ھوئی نہ قطرہ گرا نہ غلہ اگاپھر تنگ آکر اپنا ایک وفد بیت اللہ بھیجاان کا دستور تھا جب مصیبت آتی تو اوپر والے کو پکار اٹھتےجب دور ھوجاتی تو اپنے بتوں کو پوجنے لگتےبیت اللہ وفد گیا اور کہا کہ ہمارے لئے اللہ سے دعا کرو کہ بارش برسائےاللہ نے3 بادل پیش کئےکالاسفیدسرخاللہ نے فرمایا ان میں سے ایک کا انتخاب کروانھوں نے آپس میں مشورہ کیاکہ سرخ میں تو ھوا ھوتی ھےسفید خالی ھوتا ھے کالے میں پانی ھوتا ھے کالا مانگواللہ تعالی نے کہا واپس پہنچو بادل بھیجتا ھوںوہ خوشی خوشی واپس آئے سب لوگ ایک میدان میں جمع ھوئےبادل آیا وہ ناچنے لگے کہ اب بارش ھوگیقحط مٹے گا کھانے کو ملے گاکیا پتا تھا کہ وہ بارش نہیں اللہ کا عذاب ھےجو تم ھود سے کہتے تھے کہ لے آ ! جس سے ہم کو ڈراتا ھےاس بادل مین ایسی تند و تیز ھوا تھی کہ جس نے ان کو اٹھا مارا ان کے گھر اڑا دئیےساٹھ ہاتھ کے قد اور لوگ تنکوں کی طرح اڑ رہے تھے۔ ھوا ان کے سروں کو ٹکراتی تھی اتنی زور سے ٹکراتی کہ ان کے بھیجے نکل نکل کر منہ پر لٹک گئےبعض لوگ بھاگ کر غار میں گھس گئے کہ یہاں تو ھوا نہیں آ سکتیمگر میرے رب کا حکم ھو کر رہتا ھےھوا غار میں بگولے کی طرح داخل ھوتی اور انکو باہر اٹھا کر پھینک دیتی اللہ نے فرمایافھل تری من باقیہکیا کوئی باقی بچا ھے ؟اللہ تعالی نے ان کو ہلاک کر کے دکھایا کہ جب تم اللہ کی اس کے رسول کی نافرمانی کروگے اللہ تم پر ایسی جگہ سے عذاب بھیجے گا جہاں سے گمان بھی نہ ھوگا جو گناہ قوم عاد نے کیا کیا وہ ہم نہیں کر رہے۔

کیا ہم اللہ کی حدوں کا پار نہیں کر گئے کیا ہم نے اللہ کو اپنی نافرمانی سے نہیں للکارا ھوا ھےتوبہ کرو اللہ سے ڈروقرآن پڑھو جن گناھوں کو ہم معمولی سمجھتے ہیں اللہ نے ان گناھوں پر پوری پوری قومیں زمین بوس کر دی ہیں

دن کی زیادہ پڑھی گئیں پوسٹس‎