سات غلطیوں پر پچھتانے کی ضرورت نہیں کیونکہ یہ فائدہ مند ہیں

  جمعہ‬‮ 25 مئی‬‮‬‮ 2018  |  15:33

ہر انسان غلطیاں کرتا ہے اور اسی طرح ہی آگے بڑھنے کا راستہ بھی ملتا ہے، تاہم جب بھی ہمارے کسی فیصلے کو لوگ غلط قرار دیتے ہیں تو ہم معذرت خواہانہ رویے کے ساتھ آگے بڑھ جاتے ہیں۔ مگر ایک حقیقت یہ ہے کہ ہمارے کچھ اقدامات ایسے ہوتے ہیں جن پر ہمیں پچھتانے کی ضرورت نہیں ہوتی کیونکہ وہ ہماری ذہنی اور جسمانی صحت کے لیے فائدہ مند ہوتے ہیں، یہاں ہم آپ کو ڈان نیوز کے توسط سے ایسے ہی 7 اقدامات کے بارے میں بتا رہے ہیں جو کسی بھی معذرت خواہانہ رویے

کا باعث نہیں بلکہ دراصل ستائش کے حقدار ہوتے ہیں۔

جلد سونے کی عادت اگر آپ اور آپ کے دیگر دوست شام کو کسی پروگرام کے لیے رات دیر تک جاگنا چاہتے ہیں مگر آپ تھکاوٹ محسوس کررہے ہیں اور جلدی سونے کے لیے لیٹ جاتے ہیں تو اس میں کچھ غلط بھی نہیں کیونکہ نیند ہر ایک کی صحت اور خوشی کے لیے لازمی ہوتی ہے اور سائنس کا ماننا ہے کہ کم نیند ہمارے اندر تناﺅ اور دیگر سنگین طبی مسائل کا سبب بنتی ہے، لہٰذا بستر پر جلد چلے جانا آپ کے جاگنے سے زیادہ اہمیت رکھتا ہے اور اس پر معذرت کی کوئی ضرورت نہیں۔

انکار کرنا کیا آپ بہت زیادہ کام کر رہے ہیں؟ تو جان لیں کہ کئی بار مختلف چیزوں کے لیے انکار کردینا ہاں کے مقابلے میں زیادہ بہتر ہوتا ہے، درحقیقت اگر آپ اپنی شخصیت کو بوجھ تلے دبانے سے بچانا چاہتے ہیں تو انکار کرنے کی جرات پیدا کرنا ہی پڑتی ہے اور یہ کوئی غلط بات بھی نہیں کیونکہ یہ آپ کے اپنے ہی حق میں بہتر ہوتی ہے اور اس پر دیگر افراد کی تنقید کو نظرانداز کردیا جانا چاہیئے۔

تعطیلات ایک افسوسناک حقیقت یہ ہے کہ دنیا بھر میں لوگ اپنے دفاتر سے ملنے والی تعطیلات لینے سے ہی خوفزدہ رہتے ہیں حالانکہ یہ ان کا حق ہوتا ہے، 8 گھنٹے کے معمول سے کچھ عرصے کا وقفہ کسی پچھتاوے کے بجائے شخصیت کو بہتر بناتا ہے اور آپ کو بغیر کسی ہچکچاہٹ کے اس سے فائدہ اٹھانا چاہیئے۔

خراب دوستی سے جان چھڑانا دوستوں سے علیحدگی بہت مشکل ہوتی ہے بلکہ کئی معاملات میں تو یہ کسی رومانوی تعلق توڑنے سے بھی زیادہ تکلیف دہ ہوتا ہے، مگر کئی بار یہ علیحدگی آپ کی صحت کے لیے بہتر ثابت ہوتی ہے، کیونکہ کسی دوست کے ساتھ کشیدگی سے آپ کے اندر تناﺅ بڑھتا ہے اور آپ کے لیے مختلف مسائل کا سبب بن سکتا ہے، اگر ایسے تعلق کو ختم کیا جاتا ہے تو اس پر معذرت خواہانہ سوچ کسی بھی طرح درست نہیں۔

فوری طور پر ای میل کا جواب نہ دینا ای میل پر فوری جواب دینے کا دباﺅ موجودہ عہد کی جدید ٹیکنالوجی میں بہت زیادہ بڑھ چکا ہے تاہم اس سے کچھ دیر کے لیے نجات حاصل کرنے میں کوئی برائی بھی نہیں، درحقیقت بیشتر کامیاب کاروباری افراد تو صبح کے وقت ای میلز چیک ہی نہیں کرتے، خاص طور پر گھر میں بھی آفیشل ای میلز پڑھنا کسی بھی طرح اچھا یا فائدہ مند نہیں ہوتا۔

تنہا وقت گزارنا ہوسکتا ہے کہ ہم میں سے بیشتر لوگ اس خیال سے اتفاق نہ کریں کہ اپنے خیالات کے ساتھ کچھ وقت تنہا گزاریں مگر سائنس کا ماننا ہے کہ ہمیں اس پر غور کرنا چاہیے، خاص طور پر اُس وقت جب ہم اپنے لیے کچھ وقت چاہتے ہوں، تنہا رہنے کے متعدد فوائد ہوتے ہیں، یہ آپ کو ریچارج کرنے میں مدد دیتا ہے اور اس سے آپ خود پر کنٹرول کرنا سیکھ سکتے ہیں۔

خود کو ترجیح دینا زندگی میں خوشی بہت اہمیت رکھتی ہے اور یہی وجہ ہے کہ ہمیں اپنی ضروریات کو ترجیح دینی چایئے، جس پر معذرت کی بھی ضرورت نہیں، درحقیقت یہ سوچ صحت مندانہ ہوتی ہے اور اس کا مطلب یہ ہوتا ہے کہ آپ ذہنی، جذباتی، جسمانی اور روحانی طور پر اپنے موجودہ خلاء کو بھر رہے ہیں اور یہ قطعی خودغرضی میں شمار نہیں ہوتا۔

دن کی زیادہ پڑھی گئیں پوسٹس‎