Android AppiOS App

کامیابی کے راستے میں صبر کا امتحان

  منگل‬‮ 30 جنوری‬‮ 2018  |  11:29

ایک امیر آدمی بلیوں کا شوقین تھا، اس نے ایک مشہور پینٹر سے کہا کہ اسے بلی کی تصویر بنا کر دے۔ تصویر بنانے والا متفق ہو گیا اور اس نے اس آدمی کو تین ماہ بعد آنے کو کہا۔ جب آدمی واپس آیا تو اس پینٹر نے پھر اسے تین ماہ بعد آنے کا کہا۔ اس طرح کرتے کرتے سال  بیت گیا۔ بالاخر پینٹر نے اس آدمی کی درخواست پر اپنا برش تیار نکھار سنوار کر تیار کیا اور ایک ہی حرکت میں بلی کی تصویر بنا ڈالی۔ یہ اس  پینٹر کی بنائی ہوئی سب سے شاندار تصویر تھی اور اس آدمی نے بھی ایسی تصویر کہیں نہ دیکھی تھی۔ وہ حیران تھا، لیکن پھرناراضگی کا اظہار کرتے  ہوئے کہا: یہ تصویر بناتے ہوئے تمہیں صرف 30

سیکنڈز لگے، تم نے مجھے پورا سال انتظار میں کیوں رکھے رکھا؟ بغیر بولے استاد نے ڈبہ کھولا اور بلی کی ہزاروں تصویریں نیچے  گر گئیں۔

کامیابی تربیت اور وقت کے بعد ملتی ہے۔ جلد بازی سے کامیابی سے دوری ہو سکتی ہے۔ ایسے لوگ جو محنت کرتے ہیں اور چوٹی سر کر نے کے لیے اور چڑھتے رہتے ہیں، ایک نہ ایک دن وہ اسے سر کر ہی لیتے ہیں۔ ایسے لوگ جو بنا ہوا کام دکھاتے ہیں ان کے پیچھے ان کی محنت ہوتی ہے۔ کامیابی لگن کا نتیجہ ہوتی ہے۔ پختگی وقت کے ساتھ آتی ہے اور جس نے محنت کی ہوتی ہے اسکا کمال نظر آتا ہے۔ دنیا میں اللہ تعالی ہر اس انسان کو کامیابی دیتا ہے جو تگ و دو کرتا ہے۔ چاہے وہ کافر ہو یا مسلمان۔  ہاتھ پر ہاتھ دھرے بیٹھے رہنے والے کو کامیابی کہاں ملتی ہے۔ یہ اسی کا مقدر بنتی ہے جو اسے چاہتا ہے۔ اور جو اسے چاہتا ہے وہ اس کی قیمت جانتے ہوئے اپنی جدوجہد اس کے لیےجاری رکھتا ہے۔

 دن کی بہترین پوسٹس پڑھنے کے لیے لائف ٹپس فیس بک پیچ پر میسج بٹن پر کلل کریں۔

دن کی زیادہ پڑھی گئیں پوسٹس‎